ملک ممتاز حسین قادری ڈیلی تلہ گنگ نیوز اور اٹک اپ ڈیٹ کی نظر سے

0
1101
talagangاسلام آباد(شہزاد احمد ملک)سابق گونر پنجاب کو ممتاز قادری نے دوران ڈیوٹی اسلام آباد کی کوہسار مارکیٹ میں فائرنگ کر کے قتل کر دیا ملک ممتاز قادری 29فروری 2016راولپنڈی کی اڈیالہ جیل صبح چار بجے پھانسی دے دی گئی پھانسی سے ایک دن قبل ملک ممتاز حسین قادری کو ان کے اہلخانہ سے ملوایا گیا ممتاز قادری 1985میں اعوان فیملی میں آنکھ کھولی اورراولپنڈی کے مسلم ٹاؤن کے رہائشی محمد بشیر اعوان ایک چھوٹے تاجر جن کا سبزی کا کاروبار تھا اور پانچ بھائی کے علاوہ دو بہنیں بھی ہیں سابق گونر پنجاب سلمان تاثیر مرحوم کے قتل سے ایک سال چار ماہ قبل ممتاز قادری ازاوجی زندگی مین داخل ہوئے اور چار ماہ کا ایک بیٹا بھی ہے ممتاز قادری گرفتاری سے قبل یوسف کالونی راولپنڈی میں رہائش پزیر ہو گئے تھے اور وہ اقوام متحدہ کے مشن کی سیکورٹی پر معمور رہے یہ وہ پیپلز پارٹی کی دورے حکومت تھی ممتاز قادری کے سب سے بڑے بھائی دلپزیر اعوان نے ممتا قادری کو شریف تابعدار اور ایمان دار اور دین سے لگاؤقرار دیتے ہوئے کہا کہ وہ پانچ وقت کے نمازی تھے تمام بھائیوں سے چھوٹا ممتاز قادری ہیں لیکن اپنے معزز خاندان میں سب سے زیادہ مذہبی و ابستگی رکھتے تھے ممتاز حسین قادری کو حالات نے اجازت نہ دی کے کوئی اعلی تعلیم حاصل کر سکیں میٹرک تک ہی تعلیم حاصل کر سکے میٹرک کے بعد وہ پنجاب پولیس مین بھرتی ہو گئے اور کمانڈو کی ٹریننگ کے بعد ایلیٹ فور س سکواڈ کا حصہ بن گئے چار جنوری 2011کو سابق گونر پنجاب مرحوم سلمان تاثیر کے قتل سے سات مہینے پہلے گونر پنجاب کی سیکورٹی سکوؤڈ کا حصہ بنا گیاسلیم تاثیر کے قتل کے بعد تحقیقاتی اور احساس اداروں نے ممتاز قادری اور اس کے چار بھائیوں سے تحقیقات بھی کی ممتاز قادری کے پھانسی کے احکامات آصف سعید کھوسہ نے جاری کیئے پھانسی کے بعد ممتاز قادری کے چہرے پر مسکراہٹ پھیل گئی جبکہ پھانسی کو حکومت نے بڑے خفیہ رکھا رات کی تاریکی میں خاندان سے ملاقات کر وائی گی اور اڈیالہ جیل راولپنڈی چارو اطراف سے سیکورٹی کو ٹائیٹ رکھا گیا حکومت کے وزیر پرویز رشید نے پرائیوٹ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ عوام کا احتجاج سمجھ سے بلا تر ہے اب تک ڈیلی تلہ گنگ نیوز کو ملنے والی اطلاع کے مطابق پورے ملک میں احتجاج اور مظاہروں کا سلسلہ جاری ہے ممتاز قادری کو بڑی اہمیت حاصل ہو گئی ہے اور انہیں اڈیالہ جیل راولپنڈی صبح چار بجے پھانسی دے دی گئی تھی پھانسی سے ایک دب قبل پرائیوٹ میڈیا اور ڈیلی تلہ گنگ نیو زکا انکشاف ہو گیا تھا مگر سرکاری طور پر تصدیق نہیں ہو رہی تھی نا ہان میں جواب نا نہ میں جس کی وجہ سے پرائیوٹ میڈیا اور ڈیلی تلہ گنگ نے نیوز کو بریک نہیں ارسلان احمد ملک کو یہ اعزاز ہو گیا ہے کہ انہون نے اپنے کالج میں موبائل کے زرئعے ملک کے حالات اور احتجاج مظاہرے اور ممتاز حسین قادری کی پھانسی کی نیوز کو شائع کر دیا ڈیلی تلہ گنگ نیو ز چاہنے والی کی کمی نہیں خبروں میں سب سے آگے

تبصرے

شیئر کریں

کوئی تبصرہ نہیں

جواب چھوڑ دیں