’’تلہ گنگ ‘‘جامعہ بیت السلام ایک دینی درسگاہ کے ساتھ عملی تربیت گاہ بھی ہے

0
119
01تلہ گنگ (تحصیل رپورٹر) مدارس دینی وملی خدمات میں مصروف عمل ہیں ملک وملت کے لئے مدارس کی خدمات کسی سے ڈھکی چھپی نہیں ۔اصلاح امت کے لئے مدارس کا کلیدی کردار ہے ۔ان خیالات کا اظہارصدر وفاق المدارس العربیہ پاکستان مولانا سلیم اللہ کے زیرصدارت جامعہ بیت السلام کے سالانہ اصلاحی و اجتماع سے سابق وفاقی زیرمحمد اعجاز الحق ایم این اے ، وفاق المدارس العر بیہ کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل مو لانا قاضی عبد الرشید،بیت السلام کے بانی مو لانا عبد الستار،مفتی عبدالجباراوردیگر مقررین نے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔جامعہ بیت السلام کے چوتھے سالانہ اصلاحی و اجتماع میں ہزاروں افراد سے خطاب کرتے ہوئے مقررین کا کہنا تھا کہ جامعہ بیت السلام ایک دینی درسگاہ کے ساتھ عملی تربیت گاہ بھی ہے۔ جامعہ بیت السلام نے ان بچوں پر اتنی محنت کی کہ گو یا گدڑ ی میں لعل پیدا کر دیے ہیں۔ جامعہ بیت السلام کا ماحول جدید دور کے تقاضوں کے مطابق اعلیٰ اور معیاری ہے ۔طلبہ کو دینی ودنیاوی تعلیم سے آراستہ کرنے میں جامعہ کی بہترین خدمات لائق تحسین ہیں ۔مقررین کا کہنا تھا کہ نسل نو کو دینی ودنیاوی تعلیم سے آراستہ کرنے میں جامعہ بیت السلام کا سسٹم نہایت ہی عمدہ اور مثالی ہے جس کی نظیر کہیں نہیں ملتی۔دینی وعصری علوم کو ایک چھت تلے یکجا کرنا جامعہ بیت السلام کا احسن اقدام ہے ۔جامعہ بیت السلام نے ہمارا آنے والے کل محفوظ کردیا ہے ۔اس موقع پراساتذہ کی لگن اور محنت سے تیارہونے والے بچوں نے انگریزی و عربی میں تقاریر اور حمدونعت پیش کیں جامعہ بیت السلام سے 38قرآن پاک حفظ کرنے والے حافظ بچوں کی دستار بندی بھی ہو ئی۔اس موقع پرسابق ایم این اے سردار منصورحیات ٹمن،کرنل (ر) سلطان سرخرو،مفتی امان اللہ امیر جے یو آئی (ف) میانوالی،چوہدری غلام ربانی،چوہدری عبدالجبار،ڈاکٹر محبوب حسین جراح ،ملک طارق محمود ایڈدوکیٹ،قاری زبیر احمد ،مولانا خالد فاروق جرار ،الحاج میاں عبدالقیوم ،حاجی طلحہ زبیر ،ملک ریاض اعوان سمیت ضلع بھر سے اہم سیاسی وسماجی اور کاروباری شخصیات نے شرکت کی ۔

تبصرے

شیئر کریں

کوئی تبصرہ نہیں

جواب چھوڑ دیں