تحصیل تلہ گنگ کی یونین کونسل ملتا ن خور

0
164

multanتحریر :شہزاد احمد ملک
ملتان خورد تلہ گنگ سے چالیس کلو میٹر مین روڈ پر تلہ گنگ کا تیسرا بڑا شہر ہے ملتا خورد آبادی کے لحاظ سے کئی یونین کونسل سے آگے اور زمینی حقائق کو مدنظر رکھا جائے اگر ضلع تلہ گنگ کا نوٹیفیکشن جاری ہو تاہے تو ملتان خورد کو تحصیل کا درجہ نہ دیا گیا تو بڑی بے انصافی ہو گی یہ علاقہ سیاسی اعتبار سے بہت آگے ہے یہ شہر کاروباری لحاظ سے بھی تلہ گنگ سے مقابلہ کر رہا ہے اس گاؤں کی خاص بات یہ بھی ہے کہ اس گاؤں کے ساتھ بہت بڑے بڑے گاؤں بھی لگتے ہیں جن میں یونین کونسل جبی شاہ دلاور آج سے تین سال قبل یونین کونسل جبی شاہ دلاور بھی ملتان خور د سے منسلک تھی بعد میں جبی شاہ دلاور کو یونین کونسل کا درجہ دیا گیا یہ گاؤں کی حدود ضلع اٹک سے جا ملتی ہے اس کے بڑے بڑے گاؤ ں شاہ محمد والی ،کلری ،ڈھوک ٹالی ،کورٹ شیرہ ،جبی شاہ دلاور ،کوٹیرہ ،ڈھوک پھلی ،لنگراہ،کے علاوہ اور کئی چھوٹی بڑی گوٹھوں کے عوام کی آمدو رفت کے علاوہ ان کے عوام سودہ سلف کے علاوہ دیگر ضروریات زندگی ملتان سے خریدتے ہیں ملتان خور د میں اس وقت بھی زمین کو آگ لگی ہوئی ہے اس کی وجوہات ہم نے جانا چاہیں تو پتا چلا کہ یہاں ہر چیز ہر سہولیا ت میسر ہیں لیکن صرف دفاتروں کا فقدان ہے جس کیلئے عوام کو تلہ گنگ جا نا پڑتا ہے زمینی حقائق کو مدنظر رکھتے ہوئے ملتان خور د کو یہ حق حاصل ہے اگر ’’ضلع تلہ گنگ‘‘بنتا ہے تو تحصیل ملتان خورد بننی چاہئے ملتان خورد میں اچھے اچھے ایڈوکیٹ کے علاوہ اچھے اچھے سیاستدان بھی موجود ہیں کاروباری اعتبار سے ملتان خور دکئی علاقوں کو بہت پیچھے چھوڑ گیا یہاں کے عوام زیادہ تر کاروبار سے منسلک ہیں اور ملازم پیشہ بھی ہیں اور زمین دارہ بھی ان کا اہم پیشہ ہے ملتان خور دکو یہ بھی اہمیت حاصل ہے کہ وہ تلہ گنگ کے شانہ بشانہ کھڑا ہے لیکن علاقے کے صورتحال راز یہ ہے کہ گلیاں ٹوٹ پھوٹ کا شکار اندرون شہر میں 90%سے زائد گلیاں ویران برباد پڑی ہو ئی ہیں گندگی سے اٹکی ہوئی ہیں واپڈا احکام نے بھی منہ پھیر رکھا ہے اور علاقہ لاتعداد مسائل میں جکڑا ہوا ہے لاری اڈا پر مسافر خانہ تک موجود نہیں صاف پینے کا پانی میسر نہیں یہاں کے عوامی نمائندے انتہائی لاپروائی برت رہے ہیں اگر یہ کچھ تھوڑا دھیان دے دیں تو ملتان خورد ایک اچھے شہروں میں داخل ہو سکتا ہے ملتان خورد تعلیمی اعتبار سے بھی بہت اگے ہے اگر سیاستدان تھوڑی محنت کریں تو ملتا ن خور دایک بہت بڑا اور خوبصور ت شہر کے ساتھ ساتھ تحصیل بن سکتی ہے۔

تبصرے

شیئر کریں

کوئی تبصرہ نہیں

جواب چھوڑ دیں