تلہ گنگ مردم شماری ہونے کے باوجود گزشتہ جنرل انتخابات دو قومی چار صوبائی اسمبلی کی نشستیں۔۔۔۔

0
120
02تلہ گنگ(تحصیل رپورٹر) مردم شماری موخر ہونے کے نتیجے میں گزشتہ عام انتخابات میں ضلع چکوال میں بدستور دو قومی اور چار صوبائی اسمبلی کی نشستیں ہی برقرار رہی ہیں اور اگر 2016میں مردم شماری کرانے کا عمل مکمل نہ ہوا پھر بھی موجودہ حلقے ہی برقرار رہیں گے۔ ضلع چکوال کی آبادی گزشتہ مردم شماری (98) کے مقابلے میں چھ سات لاکھ بڑھ چکی ہے اور مردم شماری کا عمل مکمل ہونے سے ایک قومی اسمبلی اور دو صوبائی اسمبلی کی نشستیں بڑھ سکتی ہیں۔ تلہ گنگ کو بھی ضلع بنائے جانے کا معاملہ درمیان میں لٹکا ہے اور وزیراعظم نواز شریف نے جامی ہاؤس بھرپور میں تلہ گنگ کو ضلع بنائے جانے کے مطالبے پر بھی کوئی پیش رفت نہ ہوئی ، تلہ گنگ ضلع بننے کی صورت میں بھی ضلع چکوال کا سیاسی منظر یکسر تبدیل ہوگا اور مردم شماری ہونے کی صورت میں بھی سیاسی اثرات سامنے آئیں گے ۔ بہرحال 2018 تک ضلع چکوال میں بڑی تبدیلیو ں کی نشاندہی ہو چکی ہے ۔ 2018کے عام انتخابات مختلف نوعیت کے ہونگے۔

تبصرے

شیئر کریں

کوئی تبصرہ نہیں

جواب چھوڑ دیں