’’بو چھال کلاں‘‘مر جائیں گے مٹ جائیں گے سیمنٹ فیکٹری نہیں بننے دیں گے ۔۔

0
255
02بوچھال کلاں (نامہ نگار )علاقہ ونہار کے عوام مجوزہ سیمنٹ فیکٹری کے خلاف سراپا احتجاج بن گئے مر جائیں گے فیکٹری نہیں بننے دینگے دوسری جانب سیمنٹ فیکٹری مالکان بھی بضد ہو گئے کہ ہر صورت میں سیمنٹ فیکٹری بنائیں گے تفصیل کے مبابق ایک نجی سیمنٹ فیکٹری مالکان نے بوچھال کلاں کے قریب سیمنٹ فیکٹری لگانے کا پروگرام بنایا جس پر علاقہ بھر کے عوام نے احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ آبادی کے نذدیک سیمنٹ فیکٹری لگنے ست سانس کی بیماریا جنم لے سکتی ہیں اس لئے وہ یہاں سیمنٹ فیکٹری نہیں لگانے دیگے انہوں نے عدالت سے اس کا حکم امتناعی بھی حاصل کر لیا جبکہ سیمنٹ فیکٹری مالکاں نے ہر قانون سے بالا تر ہو کر اس بات کی ضد لگا لی کہ چاہے تمام آبادی کے لوگ مر جائیں وہ یہاں ہر صورت میں فیکٹری لگائیں گے اور گذشتہ روز انہوں نے یہاں علاقائی سروے کا پروگرام بنایا جس میں مالکاں نے کھیوڑہ اور دیگر مقامات سے عوام کی بڑی تعداد اکٹھی کی اور اس سے قبل کہ وہ جعلی سروے مکمل ہوتا بوچھال کلاں اور دیگر علاقوں کے عوام وہاں پہنچ گئے اور ان کے گھنونے پروگرام کو تہس نہس کر دیا باخبر ذرائع کے مطابق انہوں نے حکومت سے سیمنٹ فیکٹری کی جگہ لیز پر حاصل کر لی ہے اور یہ شوشا چھوڑ رہے ہیں کہ حکومت اور مقامی قیادت ان کے ساتھ ہے اس شوشے سے مسلم لیگ ن کے مضبوط قلعے کی دیواریں ہل سکتی ہیں عوام نے حکام بالا سے اپیل کی ہے کہ وہ آبادی کے نذدیک سیمنٹ فیکٹری کی تعمیر کو رکوانے کے اقدامات کریں

تبصرے

شیئر کریں

کوئی تبصرہ نہیں

جواب چھوڑ دیں