تلہ گنگ و گردونواح کے علاقوں میں غیر اعلانیہ اور طویل ترین لوڈشیڈنگ نے عوام کے ہوش اڑا دیئے۔۔

0
139
08تلہ گنگ(تحصیل رپورٹر)رمضان المبارک کے دوران لوڈ شیڈنگ پر قابو پانے کے حکومتی دعوے ناکام ہو گئے۔غیر اعلانیہ اور طویل ترین لوڈ شیڈنگ نے عوام کے ہوش اڑا دئیے۔ سحری اور افطاری کے وقت بھی باقاعدگی سے بجلی بند کی جا رہی ہے۔ جبکہ سارا سارا دن کئی کئی گھنٹے بجلی بند رہتی ہے۔ اور اکثر علاقوں میں جن میں شہر بھی شامل ہے میں آٹھ سے دس گھنٹے لگاتار دن کو بجلی بند رکھی جاتی ہے جبکہ سحری کے وقت عین اس وقت لوڈ شیڈنگ شروع ہو جاتی ہے اور بجلی بند کر دی جاتی ہے جب لوگ سحری کھا رہے ہوتے ہیں۔ رمضان المبارک سے قبل حکومت اور وزراء نے علی الاعلان دعویٰ کیاتھا کہ رمضان المبارک کے دوران بجلی بند نہیں کی جائے گی مگر سب کچھ اس کے برعکس نکلا۔ اب لوڈ شیڈنگ کا یہ عالم ہے کہ چوبیس گھنٹوں میں صرف پانچ یا چھ گھنٹے بجلی دی جا رہی ہے۔ جبکہ رمضان المبارک سے قبل چھ سے آٹھ گھنٹے بجلی بند کی جاتی تھی۔ اس حوالے سے مسلم لیگ ن کی حکومت لوڈ شیڈنگ پر قابو پانے میں بری طرح ناکام ہو چکی ہے۔

تبصرے

شیئر کریں

کوئی تبصرہ نہیں

جواب چھوڑ دیں