56کروڑ کی لاگت تراپ پل وزیر اعلی پنجاب کی ہدایت پر معائنہ ۔۔

0
330

4

تلہ گنگ(تحصیل رپوٹر) وزیر اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف کی ہدایت پر 56کروڑ روپے کی لاگت سے تعمیر اور پھر پہلی ہی بارش میں اس کا ایک حصہ دریا برد ہونے والے تراپ پل کے معائنہ کیلئے چیئر مین این ایچ اے شاہد تارڑ،صوبائی وزیر سی اینڈ ڈبلیو ملک تنویر اسلم سیتھی،،سیکرٹری سی اینڈ ڈبلیومیاں مشتاق،عظمت محمود کمشنر راولپنڈی،عاصم اے ڈی سی جی،واصف الرحمن اسسٹنٹ کمشنر تلہ گنگ ،سابق چیئر مین پیمرا ملک مشتاق احمد ،دست راست ایم پی اے شہر یار اعوان پیر کے روز موقع پر پہنچے۔جہاں اُنہوں نے ٹوٹے ہوئے پل کا معائنہ کیا ۔اس موقع پر دورہ کرنے والی کمیٹی نے اپنی سفارشات مرتب کیں ۔بعد ازاں چکوال ڈی سی او آفس میں وزیر اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف کو ویڈیو کانفرنس کے ذریعے اُن سفارشات سے آگاہ کیا ہے ۔واضع رہے کہ مذکورہ پل ضلع اٹک اور ضلع چکوال کو تراپ کے مقام پر ملاتا ہے اور پاکستان پیپلز پارٹی دور حکومت میں 2008میں یہ پل 56کروڑ روپے کی لاگت سے تعمیر ہوا تھا ۔جو ساون کی پہلی ہی بارش میں کار سوار تین افراد کے ساتھ دریا برد ہوا ۔بعد ازاں مقامی سطح پر وہاں لفٹ کی سہولت مہیا کی گئی جس سے گر کر خاتون سمیت تین افراد جاں بحق ہوئے ۔اس صورتحال پر علاقہ کی معروف شخصیت سابق چیئر مین پیمرا ملک مشتاق احمد آف کوٹ قاضی نے وزیر اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف ،چیئر مین این ایچ اے سمیت دیگر حکام کو خطوط لکھے جس پر وزیر اعلیٰ پنجاب نے نوٹس لیا اور متعلقہ حکام سے تفصیلی رپورٹ طلب کی ۔توقع ہے کہ پل کی دریا برد ہونے والے حصہ کی تعمیر کیلئے رواں ماہ ہی فنڈز کا اجراء کر دیا جائے گا ۔

تبصرے

شیئر کریں

کوئی تبصرہ نہیں

جواب چھوڑ دیں