دھرنے نے پورے ملک کو کنٹینرستان میں بدل دیا۔۔

0
269
l2اسلام آباد( ارسلان احمد ملک) پاکستان تحریک انصاف کے دھرنے نے پورے ملک کو ہلا کر رکھ دیا پنجاب کے تمام اضلاع میں کنٹینرز کا راج مٹی کے ذریعے روڈ بلاک کر دئیے گئے جبکہ کے پی کے کے صوابی انٹرچینج میں اسلام آباد ہائیکورٹ کے فیصلے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے دوسرے اضلاع یعنی خیبرپختونخواہ کی حدود میں داخل ہو جانا قانون کی خلاف ورزی ہی نہیں بلکہ غنڈہ گردی کی انتہا ہے وزیراعلیٰ پنجاب یہ کہاں کی عقلمندی ہے کیا یہ سیاست ہے یا ریاست میں دہشتگردی، جب بھی ان کی حکومت آئی کبھی سپریم کورٹ پر حملہ کبھی ڈکٹیٹر سے معاہدہ کرکے باہر چلے جانا تاریخ بتاتی ہے کہ جنرل ضیاء الحق کی گود میں پلنے والے بیس کروڑ عوام کو کیا بتانا چاہتے ہیں نہتے شہریوں پر جن کے پاس چاقو چھری تک موجود نہیں تھا ان پر صوابی کے مقام پر شیل اور آنسو گیس اس طرح بے دریغ استعمال کیا گیا جس طرح کشمیریوں پر ہندوستان بھی استعمال نہیں کرتا کیا یہ پاکستان کے شہری نہیں تھے کوئی انڈیا یا علاقہ غیر سے بغاوت کرکے آئے تھے پرامن احتجاج ریکارڈ کروانے اسلام آباد آرہے تھے حکومت کو اتنا خطرہ تھا کہ ہر ضلع میں رکاوٹیں کھڑی کر دیں کنٹینرز کا راج تھا اور ملک کو جس قدر نقصان ہوا شاید آنیوالی نسلیں بھی یہ نقصان اتار نہیں سکیں گی اپنے ملک کا پیسہ باہر لے گئے فیکٹریاں ملیں ان کی باہر ہیں کاروبار ان کے باہر ہیں اور بچہ کھچا وہ اپنی حفاظت کیلئے خرچ کر ڈالا اگر یہی پیسہ تلہ گنگ، لاوہ و دیگر علاقوں میں خرچ کر دیا جاتا تو آج یہ علاقے کے عوام خوشحال اور تلہ گنگ اور لاوہ پاکستان کے بڑے شہروں میں داخل ہو سکتے تھے لیکن حکومت کے کئی ارب روپے ڈبو دئیے گئے کاروبار زندگی معطل رہا اور مسافروں کو اپنی فیملی سمیت آنے جانے میں بے پناہ مسائل کا سامنا رہا اور کنٹینرز کے مالکان اور سازو سامان جو نقصان ہوا اس کا کون ذمہ دار ہو گا ڈرائیور بے چاروں سے چابیاں چھین لی گئیں اور پیسے ختم ہو گئے روٹی کے پیسے تک نہیں تھے کیا یہ انسانیت ہے اور یہی جمہوریت ہے شہباز شریف نے جنرل الیکشن 2013ء میں کہا تھا کہ میں شہباز شریف نہیں ہوں گا کہ میں نے صدر زرداری کو سڑکوں پر نہ گھسیٹا لیکن ابھی تک اتنا عرصہ گزر جانے کے باوجود اپنی زبان پر قائم نہ رہ سکے تلہ گنگ کے ارکان اسمبلی نے کوئی تازہ ترین بیان جاری نہیں کیا کیونکہ وہ کوئی اور کشتیوں کے بارے میں سوچ رہے تھے آر پی او راولپنڈی کمشنر راولپنڈی یہی دورے عوام کے مسائل کیلئے کرتے تو لوگ آج دھرنا نہ دیتے حکومت کو چاہئے کہ عوام کے مسائل پر توجہ دیں تو دھرنا روکنے کیلئے اتنے پاپڑ نہ بیلنا پڑیں گے۔

تبصرے

شیئر کریں

کوئی تبصرہ نہیں

جواب چھوڑ دیں